بنیادی صفحہ / سعودی عرب / آج کے کالمز / کورونا کی بدترین صورتحال، پاکستان نے بھارت کو سرکاری سطح پر تعاون کی پیشکش کردی

کورونا کی بدترین صورتحال، پاکستان نے بھارت کو سرکاری سطح پر تعاون کی پیشکش کردی

کورونا وائرس کی بدترین صورتحال کے بعد پاکستان نے بھارت کو سرکاری سطح پر تعاون کی پیشکش کردی۔

دفترخارجہ کے مطابق پاکستان نے بھارت کو وینٹی لیٹرز، ڈیجیٹل ایکسرے مشینیں دینے کی پیشکش کی ہے۔

دفتر خارجہ کا کہنا ہے کہ بھارت کو مدد کی پیشکش جذبہ خیرسگالی کے طور پر کی گئی۔

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا تھاکہ پاکستان نے خیرسگالی کی بنیاد پربھارت کومدد کی پیشکش کی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ بھارت سے بڑی تشویش ناک خبریں سامنے آرہی تھیں، وزیراعظم کی اجازت کے بعد بھارت کو انسانی ہمدردی کی بنیاد پرمدد کی پیشکش کی گئی۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا تھاکہ دفترخارجہ میں بھارتی ہائی کمشنر کو بلایا گیا، بھارتی ہائی کمشنرکو انسانی ہمدردی کی بنیاد پر مدد کی پیشکش کی گئی اور ان کو کہا کہ اپنی حکومت سے پوچھ کرہماری پیشکش پرجواب دیں۔

 ان کا کہنا تھاکہ وینٹی لیٹرز، ایکسرے مشین اور ماسک سمیت جوہوپایا وہ بھارت کوفراہم کریں گے، اگربھارت کامثبت جواب آیا توبراستہ واہگہ معاونت فراہم کی جائے گی۔

خیال رہے کہ بھارت کورونا کے باعث بدترین صورتحال سے دوچار ہے اور کورونا کیسز میں اضافے کے بعد آکسیجن کی کمی ہوگئی ہے۔

24 گھنٹوں میں تین لاکھ 44 ہزار سے زیادہ نئے مریض سامنے آئے ہیں جبکہ  2600 کی سانس کی ڈور ٹوٹ گئی ہے۔

اسپتالوں میں مریضوں کیلئے بستر، آکسیجن، ڈاکٹر، دوا سب کم پڑگئے، جان سے جانے والوں کیلئے شمشان گھاٹوں میں لکڑیاں، قبرستانوں میں جگہ ختم ہوگئی جبکہ میتوں کو اجتماعی سپرد خاک کرنے کی نوبت آگئی، مختلف شہروں میں آکسیجن پہنچانے کیلئے ریلوے حرکت میں آگیا۔

گزشتہ روز پاکستان کی سماجی خدمت گار تنظیم ایدھی فاؤنڈیشن کے سربراہ فیصل ایدھی نے پڑوسی ملک بھارت میں کورونا وائرس کے پھیلاؤ اور لاکھوں افراد کے متاثر ہونے پر تشویش کا اظہار کیا تھا۔

 ایدھی فاؤنڈیشن کی جانب سے 50 ایمبولینسز اور رضاکاروں کی ٹیم ہندوستان بھیجنے کی پیشکش کی گئی تھی۔

تعارف: admin

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*