بنیادی صفحہ / سعودی عرب / آج کے کالمز / اماراتی ائیرلائن 70 مسافروں کو کراچی ائیرپورٹ پر چھوڑ کر چلی گئی

اماراتی ائیرلائن 70 مسافروں کو کراچی ائیرپورٹ پر چھوڑ کر چلی گئی

پاکستانی ائیرپورٹس پر مسافروں کا ریپڈ پی سی آر ٹیسٹ نہ لیے جانے کے سبب ایمریٹس ائیرلائن نے پاکستانی مسافروں کو دبئی لے جانے سے انکار کردیا جبکہ کراچی ائیرپورٹ سے 70مسافروں کو دبئی روانہ ہونے سے روک دیا گیا۔

منیجر کراچی ائیرپورٹ کے مطابق کراچی سے دبئی جانے والی اماراتی ائیرلائن کی پرواز ای کے 601 کے 60 سے زائد مسافروں کو رپییڈ پی سی آر ٹیسٹ نہ ہونے کی وجہ سے بورڈنگ کارڈز جاری نہیں کیے گئے جبکہ سفر سے روکے جانے پر مسافروں نے ائیرلائن کے خلاف احتجاج بھی کیا۔

سی اے اے ترجمان کے مطابق متحدہ عرب امارات نے پاکستانی مسافروں کیلئے پرواز سے 4گھنٹے قبل ائیرپورٹ پر ہی ریپڈ پی سی آر ٹیسٹ کی شرط عائد کر دی ہے۔

ذرائع کے مطابق روکے گئے مسافروں کے پاس منظور شدہ لیباٹریز کی پی سی آر ٹیسٹ کی رپورٹ موجود تھی، مسافر پرواز سے قبل ائیرپورٹ پہنچے تو انھیں کہا گیا کہ نئے قوانین کے تحت ائیرپورٹ پر ریپڈ پی سی آر ٹیسٹ کیا جائے۔

کراچی ائیرپورٹ پر تعینات ہیلتھ ڈپارٹمنٹ کے ذرائع کا کہنا ہے کہ پاکستان میں کہیں بھی ریپڈ پی سی آر ٹیسٹ کی سہولت دستیاب نہیں ہے، جمعے کو کراچی کے علاوہ لاہور، اسلام آباد اور پشاور سمیت کسی پاکستانی ائیرپورٹ سے مسافر دبئی روانہ نہیں ہوسکے تاہم امارات ائیرلائنز کے ذریعے صرف ٹرانزٹ مسافروں نے سفر کیا۔

تاہم دلچسپ بات یہ کہ متحدہ عرب امارات کی ایک دوسری ائیرلائن ائیرعربیہ کے ذریعے جمعہ کی شام 130 پاکستانی مسافر ریپڈ پی سی آر ٹیسٹ کے بغیر ہی کراچی سے شارجہ کیلئے روانہ ہوئے۔

تعارف: admin

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*