719

پوری حکومت شرم سے پانی پانی ہوجائے کیونکہ !

عمرکوٹ ضلع کی تحصیل سامارو میں غریب کسان حاملہ خاتون گنگا کو سامارو سول ہسپتال میں زچگی کےلیے ایڈمٹ نہ کرنے پر خاتون نے نذدیک جھاڑیوں میں ہی بچے کو جنم دے دیا۔

غریب کسان خاتون گنگا کو سامارو سول ہسپتال میں داخل نہ کرنے پر رشتے داروں اور عوام کا شدید اجتجاج واقعے کا ڈی ایچ او عمرکوٹ نےبھی نوٹس لےلیا تفصیلات کےمطابق آج سول اسپتال سامارو میں ایک کسان حاملہ خاتون گنگا زچگی کےلیے لائی گئی مگر اسپتال انتظامیہ نے گنگا کو اسپتال میں داخل نہیں کیا۔
گنگا کے شوہر رام چند ا ور رشتے داروں نے الزام لگایا کہ ڈاکٹرز نے گنگا کو شدید تکلیف میں داخل کرنے کے بجائے دھکے دیتے ہوئے کہا کہ اس کو پرائیویٹ اسپتال لے جائیں، بعد میں گنگا نے شدید تکلیف کے باعث قریب جھاڑیوں میں بچے کو جنم دےدیا ،افسوس ناک امر تو یہ کہ سول ہسپتال سامارو گنگا زوجہ رام چند کو شدید تکلیف کے باوجود ایمبولینس تک نہ دی گئی ۔

گنگا جھاڑیوں میں بچےکو جنم دینے کے بعد رکشے میں نجی اسپتال لے گئے، و اقعے بعد گنگا کے رشتے داروں اور عوام کی ایک بڑی تعداد نے سخت اجتحاج کرتے ہوئے سول اسپتال سامارو کے ایم ایس اور ڈاکٹروں کی بے حسی کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ڈاکٹرز صرف اپنے پرائیویٹ نجی ہسپتال چلانے میں مصروف ہے جبکہ “نمائندہ پاکستان ” نے ایم ایس سول ہسپتال سے ان کے موبائل فون پر انکا موقف معلوم کرنے کے لیے متعدد رابطہ کیا لیکن ایم ایس نے فون اٹینڈ نہیں کیا۔

معلوم ہوا ہے کہ ڈی ایچ او عمرکوٹ نے واقعے کا سخت نوٹس لیتے ہوئے رپورٹ طلب کرلی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں