بنیادی صفحہ / اہم خبریں / یہ لڑکی مردوں کو کس کام پر مجبور کر کے مہینے کے 20 لاکھ روپے لیتی ہے؟

یہ لڑکی مردوں کو کس کام پر مجبور کر کے مہینے کے 20 لاکھ روپے لیتی ہے؟

لوگوں کی اکثریت کڑی محنت کرکے بھی ماہانہ چند ہزار روپے ہی کماپاتی ہے لیکن امریکہ میں ایک لڑکی ہے جو ماہانہ 20لاکھ روپے ایک ایسے طریقے سے کما رہی ہے کہ سن کر آپ دنگ رہ جائیں گے۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق 30سالہ پرنسس میگرز نامی یہ لڑکی نیویارک کی رہائشی ہے اور متشدد جنسی عمل کا رجحان رکھنے والے مردوں کو اپنی خدمات فراہم کرتی ہے۔ مرد چل کر اس کے پاس آتے ہیں جہاں یہ ان کی بھرپور تذلیل کرتی ہے، انہیں جبروتشدد کا نشانہ بناتی ہے اور وہ اس کے عوض اسے بھاری رقوم دیتے ہیں۔
میگرز کا کہنا ہے کہ وہ اس طریقے سے نہ صرف ماہانہ 20لاکھ روپے سے زائد رقم کما رہی ہے بلکہ اس کے گاہک اسے برانڈڈ ملبوسات، مہنگے ہینڈ بیگز اور دوسری اشیاءبھی تحفے میں دیتے ہیں اور اس کے لگژری لائف سٹائل کے تمام اخراجات برداشت کرتے ہیں۔اس کا کہنا ہے کہ ”میرے لگ بھگ تمام گاہک انتہائی امیر مرد ہیں جو اپنی حقیقی زندگی میں بہت طاقتور اور بااختیار ہوتے ہیں۔ وہ میرے پاس اپنی تذلیل کروانے آتے ہیں کیونکہ اصل زندگی میں یہ چیز انہیں میسر نہیں آتی۔میرے کچھ گاہک ایسے بھی ہیں جنہیں مجھے بھاری رقوم دینے سے ہی جنسی تسکین ملتی ہے۔ میرے گاہک مجھے ہفتہ وار یا ماہانہ ایک مخصوص رقم دیتے ہیں اور بدلے میں میں انہیں ان کی ’اوقات‘بتاتی ہوں۔“

تعارف: admin

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*