بنیادی صفحہ / اہم خبریں / پاکستان آرمی چیف کی پاکستان کے پہلے سکھ میجر ہرچرن سنگھ کی شادی پر مبارکباد

پاکستان آرمی چیف کی پاکستان کے پہلے سکھ میجر ہرچرن سنگھ کی شادی پر مبارکباد

راولپنڈی : پاک فوج کے پہلے سکھ میجر ہرچرن سنگھ رشتہ ازدواج میں منسلک ہو گئے ہیں، شادی کی تقریب میں حاضر اور ریٹائرڈ افسران نے بڑی تعداد میں شرکت کی جب کہ آرمی چیف قمر جاوید باجوہ نے نوبیاہتا جوڑے کے لیے نیک خواہشات کا اظہار کیا ہے۔

ترجمان آئی ایس پی آر کے مطابق میجر ہرچرن سنگھ کی گوردوارہ پنجا صاحب حسن ابدال میں شادی کی تقریب ہوئی، میجر ہرچرن سنگھ کی شادی کے موقع پر آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے اپنے ایک پیغام میں نیک خواہشات کا اظہار کرتے ہوئے نو بیاہتا جوڑے کو مبارک باد دی۔

ترجمان آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور کے مطابق میجر ہرچرن سنگھ کی شادی کے موقع پر حاضر و ریٹائرڈ فوجی افسران اور ساتھیوں نے خصوصی طور پر شرکت کی اور میجر ہرچرن کی خوشیوں میں شریک ہوئے۔

ترجمان آئی ایس پی آر کا کہنا تھا کہ میجر ہرچرن سنگھ نے2007 میں پاک فوج میں شمولیت اختیارکی اور وہ پہلے سکھ میجر ہیں۔

راولپنڈی : پاک فوج کے پہلے سکھ میجر ہرچرن سنگھ رشتہ ازدواج میں منسلک ہو گئے ہیں، شادی کی تقریب میں حاضر اور ریٹائرڈ افسران نے بڑی تعداد میں شرکت کی جب کہ آرمی چیف قمر جاوید باجوہ نے نوبیاہتا جوڑے کے لیے نیک خواہشات کا اظہار کیا ہے۔

ترجمان آئی ایس پی آر کے مطابق میجر ہرچرن سنگھ کی گوردوارہ پنجا صاحب حسن ابدال میں شادی کی تقریب ہوئی، میجر ہرچرن سنگھ کی شادی کے موقع پر آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے اپنے ایک پیغام میں نیک خواہشات کا اظہار کرتے ہوئے نو بیاہتا جوڑے کو مبارک باد دی۔

ترجمان آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور کے مطابق میجر ہرچرن سنگھ کی شادی کے موقع پر حاضر و ریٹائرڈ فوجی افسران اور ساتھیوں نے خصوصی طور پر شرکت کی اور میجر ہرچرن کی خوشیوں میں شریک ہوئے۔

ترجمان آئی ایس پی آر کا کہنا تھا کہ میجر ہرچرن سنگھ نے2007 میں پاک فوج میں شمولیت اختیارکی اور وہ پہلے سکھ میجر ہیں۔

ٓآئی ایس پی آر کے ترجمان کا مزید کہنا تھا کہ پاک فوج میں ہرمذہب کی نمائندگی ہے اور اُن کے حقوق کا مکمل احترام کیا جاتا ہے جس کی مثال میجر ہرچرن سنگھ کی صورت میں موجود ہیں اور پاک فوج میں تمام اقلیتوں کی نمائندگی قومی یکجہتی کی علامت ہے۔

تعارف: admin

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*