بنیادی صفحہ / اہم خبریں / پاکستان کی تاریخ کا سب سے بڑا آپریشن، چھینی گئی 51 گاڑیاں برآمد

پاکستان کی تاریخ کا سب سے بڑا آپریشن، چھینی گئی 51 گاڑیاں برآمد


رینجرز نے کراچی سمیت سندھ بھر میں آپریشن کے بعد چھینی گئی 51 گاڑیوں کو برآمد کرلیا جس کو پاکستان کی تاریخ کی ‘سب سے بڑی’ کارروائی قرار دیا۔

سیکٹرکمانڈر سچل رینجرز بریگیڈیر نسیم کا سینیئر سپرینٹنڈنٹ پولیس ایسٹ عرفان بلوچ کے ہمراہ کہنا تھا کہ پولیس اور رینجرز نے ناظم آباد کے علاقے میں چند روز قبل تلاشی کے دوران دو افراد کو اسلحہ اور چھینی گئی گاڑیوں سمیت گرفتار کرلیا تھا جن کی شناخت قاضی منیب احمد صدیقی اور محمد شیراز کے نام سے ہوئی۔

بریگیڈیر نسیم نے کہا کہ ‘ابتدائی تفتیش میں غیرمتوقع انکشافات ہوئے کہ یہ دونوں افراد صوبے میں کار چھیننے والے گروپ کے متحرک ارکان میں شامل ہیں’، گرفتاری کے فوری بعد سندھ کے مختلف علاقوں سے چار گاڑیوں کو برآمد کرلیا گیا تھا۔

ان کا کہنا تھا کہ انکشافات کی روشنی میں تفصیلی حکمت عملی ترتیب دی گئی اور چھینی گئی کاروں کو برآمد کرکے ان کے مالکان تک پہنچانے کو یقینی بنانے کے لیے ٹیم تشکیل دی گئی تھی۔

یہ بھی پڑھیں:کراچی: رینجرز کے خصوصی اختیارات میں مزید 90 روز کی توسیع
انھوں نے مزید کہا کہ آپریشن کے دوران انکشاف ہوا کہ ‘یہ گروپ بڑے پیمانے پر گاڑیوں کو چھینتا ہے اور ان گاڑیوں کو ملک کے دیگر حصوں کو بھیج دیتا ہے’۔

بریگیڈیر نسیم نے کہا کہ چھینی گئی گاڑیوں کے اصل مالکان مایوس ہورہے تھے جبکہ نئے خریدار بھی چھینی گئی کاروں کے حوالے سے لاعلم ہوتے تھے۔

آپریشن کی تفصیلات سے میڈیا کو آگاہ کرتے انھوں نے کہا کہ مجموعی طور پر 16 افراد کو گرفتار کرلیا گیا ہے جبکہ ان میں سے 10 کو رہا کردیا گیا اور دیگر گرفتار افراد کو مزید تفتیش کے لیے حراست میں رکھا گیا ہے۔

سیکٹر کمانڈر کا کہنا تھا کہ صوبے میں 86 گاڑیوں کی چھیننے کی شکایات درج ہوئی تھیں جن میں سے 51 گاڑیوں کو برآمد کرلیا گیا ہے جن کو عدالت کے حکم اور قانونی کارروائی کے بعد اصل مالکان کے حوالے کردیا جائے گا۔

تعارف: admin

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*