بنیادی صفحہ / اہم خبریں / پاکستانی پاسپورٹ ایک بار پھر کمزور ترین قرار

پاکستانی پاسپورٹ ایک بار پھر کمزور ترین قرار


اگر تو آپ کے پاس پاکستانی پاسپورٹ ہے تو بری خبر یہ ہے کہ اسے دنیا کا دوسرا کمزور ترین پاسپورٹ قرار دیا گیا ہے۔

یہ بات آرٹن کیپیٹل کی جانب سے گلوبل پاسپورٹ پاور رینک 2017 کی نئی فہرست میں سامنے آئی ہے جس میں پاسپورٹس کی طاقت کا معیار بغیر ویزہ ممالک میں اجازت کو قرار دیا گیا۔

فہرست کے مطابق پہلی بار کوئی ایشیائی ملک طاقتور ترین پاسپورٹ کا حامل قرار پایا ہے اور یہ ملک سنگاپور ہے، جس کو رکھنے والے 159 ممالک میں بغیر ویزے کے جاسکتے ہیں جس کے بعد دوسرا نمبر گزشتہ دو برسوں سے سرفہرست رہنے والے ملک جرمنی کا ہے، جس کے شہریوں کو 158 ممالک میں ویزے کی ضرورت نہیں۔

مزید پڑھیں : پاکستانی پاسپورٹ کی تاریخ اور ارتقاء

یورپی ملک سوئیڈن جبکہ ایشیائی ممالک جنوبی کوریا مشترکہ طور پر تیسرے نمبر پر رہے، جن کے شہریوں کے لیے 157 ممالک ویزہ فری یا ویزہ آن ارائیول کی سہولت موجود ہے۔

چوتھے نمبر پر ڈنمارک، فن لینڈ، اٹلی ، فرانس، اسپین، ناروے، جاپان اور برطانیہ رہے، جن کے شہریوں کو یہ چھوٹ 156 ممالک میں حاصل ہے۔

فن لینڈ، فرانس، اٹلی، اسپین اور برطانیہ کے پاسپورٹس رکھنے والے 175 ممالک میں بغیر ویزہ کے جاسکتے ہیں جبکہ بیلجیئم، ڈنمارک، نیدرلینڈز اور امریکی شہریوں کو یہ چھوٹ 174 ممالک میں ملتی ہے۔

پانچویں پر 155 ممالک کے ساتھ لگسمبرگ، سوئٹزرلینڈ، نیدرلینڈ، بیلجیئم اور پرتگال پر رہے۔

بھارت اس فہرست میں 75 ویں نمبر پر ہے جس کا پاسپورٹ رکھنے والے 51 ممالک میں ویزہ فری انٹری یا ویزہ آن ارائیول کی سہولت سے مستفید ہوسکتے ہیں۔

دوسری جانب دنیا کے کمزور ترین پاسپورٹس کی بات کی جائے تو افغانستان سرفہرست ہے جس کے پاسپورٹ ہولڈر 22 ممالک میں ویزہ فری انٹری کے حقدار ہیں۔

پاکستانی پاسپورٹ پر یہ سہولت صرف 26 ممالک کے لیے ہے اور اس طرح وہ دوسرا کمزور ترین پاسپورٹ قرار پایا، گزشتہ سال پاکستانی شہریوں کو 29 ممالک میں ویزہ فری انٹری، ویزہ آن ارائیول یا ای ویزہ کی سہولت حاصل تھی مگر اب اس میں کمی آئی ہے۔

عراقی شہریوں کو بھی 26 ممالک میں یہ چھوٹ حاصل کرسکتے ہیں اور وہ پاکستان کے ساتھ مشترکہ طور پر دوسرے نمبر پر ہے۔

حیران کن طور پر خانہ جنگی سے متاثرہ ملک شام اس فہرست میں پاکستان سے اوپر ہے اور وہاں کے شہریوں کو 29 ممالک یہ سہولت ملتی ہے۔

صومالیہ 34 ممالک کے ساتھ چوتھے، یمن اور بنگلہ دیش 35 ممالک کے ساتھ پانچویں، سری لنکا، نیپال، ایران اور سوڈان 36 ممالک کے ساتھ چھٹے، لبنان 37 ممالک کے ساتھ ساتویں، لیبیا اور شمالی کوریا 38 ممالک کے ساتھ 8 ویں، فلسطین، اریٹیریا اور ایتھوپیا 39 ممالک کے ساتھ 9 ویں جبکہ جنوبی سوڈان 40 ممالک کے ساتھ 10 ویں نمبر پر ہے۔

تعارف: admin

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*